June 23rd, 2024 (1445ذو الحجة16)

شہریوں کے جان ومال کی حفاظت کرنا حکومت کی ذمے داری ہے۔ ناظمہ حلقہ خواتین جماعت اسلامی صوبہ سندھ رخشندہ منیب

 ناظمہ حلقہ خواتین جماعت اسلامی صوبہ سندھ رخشندہ منیب نے ڈکیتی کی واردات میں ڈاکوؤں کی فائرنگ سے شہید ہونے والے سابق ناظمہ اسلامی جمعیت طالبات کراچی وقار فاطمہ کے صاحبزادے گولڈمڈلسٹ نوجوان حافظ اتقا معین کی رہائش گاہ پر جاکر ان کے اہل خانہ سے ملاقات و تعزیت کی۔ ناظمہ صوبہ نے مرحوم کی مغفرت اور اہل خانہ کے لیے صبر جمیل کی دعا کی اور کہا کہ سندھ حکومت، محکمہ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے ادارے عوام کے جان و مال کے تحفظ میں مکمل طور پر ناکام ہوگئے ہیں اور جرائم پیشہ عناصر و مسلح ڈاکو شہر میں مسلسل اپنی کارروائیاں جاری رکھے ہوئے ہیں۔چند ماہ میں دوران ڈکیتی مزاحمت پر78افراد کاقتل لمحہ فکر ہے۔قاتلوں ودہشت گردوں کو کھلی چھوٹ پرحکومت وادارے خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں ۔سیف سٹی سے لے کر سیکورٹی کے نام پراربوں روپے خرچ کرنے کے باوجود عوام غیرمحفوظ ہیں ،روزانہ نوجوانوں وتاجروں کی لاشیں مل رہی ہیں۔جب اسٹریٹ کرائم وبدامنی کی صورتحال ملک کے سب سے بڑے شہرکی ہے توپھرسندھ کے باقی شہروں میں عوام کس اذیت ناک صورتحال سے دوچار ہوں گے۔شہریوں کے جان ومال کی حفاظت کرنا حکومت کی ذمے داری ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت اتقا معین کے قاتلوں کو گرفتار کرے اور شہر میں امن و امان کی صورتحال کو بہتر کرنے کے لیے ٹھوس اقدامات کرے ، ملاقات میں نائب ناظمات صوبہ عائشہ ودود ، عظمیٰ عمران اور عذرا جمیل بھی موجود تھیں