June 19th, 2019 (1440شوال15)

قرا ر داد فلسطین

 

سر زمین فلسطین پر طلو ع ہو نے والا ہر دن لا کھو ں فلسطینی عوا م سے جینے کا حق چھین لینے کی صیہو نی کو ششو ں کی گوا ہی دیتا ہے ۔ ما ؤ ں کی گو د ویرا ن کر دینے ،بز ر گو ں سے جوا ن بیٹو ں کا سہا را چھین لینے ، بہنو ں کو عز ت و عصمت سے محرو م کر دینے ، بچو ں کو یتیمی اور خواتین کو بیو گی کی آ گ میں جھو نک دینے ،زیتو ن کے با غا ت کو خا کستر کر دینے اور کھیتو ں و کھلیا نو ں کو ویران کر دینے ، لا کھو ں فلسطینیو ں کو اپنے گھر آ نے کے حق سے محرو م کرکے پو ری دنیا میں در بدر بھٹکنے پر مجبو ر کر دینے اور مسجد اقصیٰ کے دامن میں پنا ہ لینے والے با قی ماند ہ عوا م کو اسیری ، مو ت یا بھو ک کی نذ ر کر دینے کا لا متنا ہی سلسلہ گز شتہ 70 سا لو ں سے جا ری ہے ۔ غا صب صیہو نی اور انکے عا لمی سر پر ستو ں کا بس چلتا تو وہ فلسطین سے منسو ب ہر شے کو بہت پہلے ہی خا ک کر چکے ہو تے لیکن سنّت الہٰی کے مطا بق انکے ہر ظلم نے فلسطینی مزا حمت اور قبلۂ اوّل کو آ زاد کر وانے کے عز م کو مزید توا نا و مضبو ط کیا ہے ۔ سر زمین اقصیٰ کے حا لیہ وا قعا ت ایسی حقیقت کا منہ بو لتا ثبو ت ہیں ۔ مقبو ضہ فلسطین میں 14 مئی 2018 برو ز پیر اسرا ئیل میں امریکی سفا رتخانے کی منتقلی کے خلا ف مظا ہرہ کرنے والے نہتے فلسطینیو ں کی اسرا ئیلی دہشت گر دو ں کے ہا تھو ں شہا دت ان ہی وا قعا ت کا تسلسل ہے ۔سر زمین مقد س اور مسجد اقصیٰ کی آ زا دی و حفا ظت مسلما نو ں کا ایما نی فر یضہ ہے ۔ اس وقت تما م صیہو نی طا قتیں مل کر امّت مسلمہ کے خلا ف سا ز شو ں میں مصرو ف ہیں ۔ ان حا لا ت میں تما م مسلم مما لک کو متحد ہو کر ان سا زشو ں کا مقا بلہ کرنا ہو گا ۔ 
ہما را مطا لبہ ہے کہ :۔
* او آ ئی سی ( OIC ) فو ری طور پر اپنا اجلا س طلب کرے اور تما م اسلامی مما لک کو اسرا ئیل سے سفا رتی تعلقا ت منقطع کرنے پر پا بند کرے ۔ 
* عا لمی برا دری اسرا ئیلی فو جیو ں کے ہا تھو ں فلسطینیو ں کے قتل عا م کا نو ٹس لے اور اقوا م متحدہ اس سلسلے میں اپنا کردار ادا کرے ۔ 
* حکو مت پاکستان اسرا ئیل کے حوالے سے عا لمی سطح پر دو ٹو ک پا لیسی اختیا ر کرے اور حقیقی اسلامی مملکت کا کردار ادا کرے ۔